الأربعاء, 28 آب/أغسطس 2019 20:21

غزل : مقصود انور مقصود - دوحہ ، قطر

Rate this item
(0 votes)

غزل

مقصود انور مقصود

دوحہ ، قطر

ہتھیلی پہ تمہاری شوق سے میں اپنی جاں رکھ دوں
کہو تو کورے کاغذ پہ انگوٹھے کا نشاں رکھ دوں

اگر سچ بولنا ہے جرم تو پھر آپ بتلائیں
لبوں پہ قفل ڈالوں کاٹ کر اپنی زباں رکھ دوں

تجھے میری وفاداری اگر مشکوک لگتی ہے
زمانے میں گناکر میں بھی تیری خامیاں رکھ دوں

ابھی تک تو نے میرے لمس کا جادو نہیں دیکھا
وہ میرا ہو کے رہ جاتا ہے میں انگلی جہاں رکھ دوں

اگر کشتی ہواؤں کے اشارے پر ہی چلنی ہے
تو کیا ایسا کروں کہ کھول کر میں بادباں رکھ دوں

وفا کے نام پر عہد وفا کو توڑنے والا
بضد ہے نام اس کا میں جہاں میں مہرباں رکھ دوں

تمنا دل کی برآۓ تجھے مقصود مل جائے
زمیں کی گود میں لاکر کہو تو آسماں رکھ دوں

---------

مقصود انور مقصود
دوحہ ، قطر

Read 1982 times Last modified on الإثنين, 27 كانون1/ديسمبر 2021 10:57

Leave a comment

Make sure you enter all the required information, indicated by an asterisk (*). HTML code is not allowed.

Latest Article

Contact Us

RAJ MAHAL, H. No. 11
CROSS ROAD No. 6/B
AZAD NAGAR, MANGO
JAMSHEDPUR- 832110
JHARKHAND, EAST SINGHBHUM, INDIA
E-mail : mahtabalampervez@gmail.com

Aalamiparwaz.com

Aalamiparwaz.com is the first urdu web magazine launched from Jamshedpur, Jharkhand. Users can submit their articles, mazameen, afsane by sending the Inpage file to this email id mahtabalampervez@gmail.com, aslamjamshedpuri@gmail.com